المورد کے اعلامیے کا جواب - میزان ایڈمن

المورد کے اعلامیے کا جواب

 

(ادارۂ المورد کے "میزان ڈاٹ ٹی وی" سے انتظامی عدم تعلق کے اعلامیے کے جواب میں میزان ٹیم کا موقف)

          یہ بالکل بجا ہے کہ "میزان ڈاٹ ٹی وی" اور اس کے فیس بک پیج کا ادارۂ المورد کے ساتھ کوئی قانونی یا انتظامی تعلق قائم نہیں ہے۔ یہ دونوں الگ الگ ادارے ہیں جو اپنے اپنے طریقۂ کار کے مطابق دعوت دین کی خدمت انجام دے رہے ہیں۔ دعا ہے کہ اللہ ان کی مساعی کو قبول فرمائے۔ انتظامی علیحدگی کے باوجود ان کے دعوتی مقاصد بہرحال ہم آہنگ ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ دونوں اداروں کے متعلقین میں باہمی اخلاص اور تعاون کا سلسلہ حکمت عملی کے بعض اختلافات کے باوجود گزشتہ 20 سالوں سے جاری و ساری ہے۔ "میزان ڈاٹ ٹی وی" جناب جاوید احمد غامدی کے دیرینہ رفقا اور ادارۂ المورد کے سابقہ اور حالیہ کارکنان پر مشتمل ایک خالص دعوتی ادارہ ہے۔ اس کا بورڈ درج ذیل افراد پر مشتمل ہے:

1۔ قدیر شہزاد، صدر (سابق معاون مدیر انتظامی ماہنامہ "اشراق"، سابق ڈائریکٹر پبلیکیشنز المورد اور موجودہ رکن المورد یو کے)

2۔ احمد فاروق، سیکرٹری جنرل (سابق ڈائریکٹر پبلک ریلیشنز المورد، سابق ذاتی معاون جناب جاوید احمد غامدی)

3۔ سید منظور الحسن، رکن (سابق ایسوسی ایٹ فیلو المورد اور موجودہ مدیر ماہنامہ "اشراق")

4۔ جمال مصطفےٰ، رکن (موجودہ رکن المورد یو کے)

5۔ حسن حمید، رکن (المورد کی سابقہ الحاق شدہ تنظیم "یو آئی یو کے" کے بانی رکن)

بیرون پاکستان مقیم یہ پانچوں افراد جناب جاوید احمد غامدی کو اپنا استاذ، فکری رہنما اور امت کا عظیم اثاثہ تصور کرتے اور ادارۂ المورد کو اپنی مادر علمی قرار دیتے ہیں۔ وہ اس پر یقین رکھتے ہیں کہ "میزان ڈاٹ ٹی وی" کی کامیابی محض اللہ کی عنایت اور استاذ گرامی کی پرخلوص دعاؤں کا ثمر ہے۔ وگرنہ یہ چند افراد ہرگز اس لائق نہ تھے کہ اپنی کم تر صلاحیتیں، محدود مالی وسائل اور کل وقتی ملازمتوں سے بچے ہوئے اوقات صرف کر کے دبستان شبلی اور فکر فراہی کی سب سے نمایاں ویب سائٹ تشکیل دینے کا اعزاز حاصل کر پاتے اور اس کے ذریعے سے نہایت قلیل عرصے میں لاکھوں ناظرین تک دین کی دعوت کو پہنچا سکتے۔ استاذ گرامی کی پرتاثیر دعاؤں کے ساتھ ساتھ اُن کے گرامی قدر رفقا کی بے لوث اخلاقی حمایت اور المورد کے مایہ ناز اسکالرز کا بے غرض عملی تعاون بھی "میزان ڈاٹ ٹی وی" کا سرمایۂ افتخار ہے۔ المورد کے نائب صدور ڈاکٹر خالد ظہیر، ڈاکٹر شہزاد سلیم اور اس کے بورڈ کے ارکان جناب شکیل الرحمٰن، جناب الطاف محمود، جناب ڈاکٹر منیر احمد اور جناب پرویز ہاشمی کی محبتیں اور شفقتیں بلا انقطاع میسر ہیں۔ محترمہ کوکب شہزاد، جناب رفیع مفتی، جناب طالب محسن، جناب ساجد حمید، جناب ابو یحیٰ، جناب عمار خان ناصر، جناب نعیم بلوچ اور ڈاکٹر وسیم مفتی جیسے المورد کے سینئر اسکالرز اور "اشراق" کے مصنفین کا حسب موقع عملی تعاون بھی پوری طرح حاصل ہے۔ اللہ ان سب کو جزائے خیر دے۔

          استاذ گرامی کے فکر اور ادارۂ المورد کے احباب کے ساتھ اس دیرینہ، مستقل اور مشہود تعلق کی بنا پر نئے متعارفین کا اس غلط فہمی میں مبتلا ہو جانا بعید از قیاس نہیں ہے کہ "میزان ڈاٹ ٹی وی" المورد ہی سے ملحق تنظیم ہے یا اس کا کوئی ذیلی ادارہ ہے۔ غالباً اسی ممکنہ غلط فہمی کے اندیشے کے پیش نظر المورد کی انتظامیہ نے "میزان ڈاٹ ٹی وی" کے ساتھ اپنے قانونی اور انتظامی عدم تعلق کا اعلامیہ جاری کیا ہے۔ میزان ٹیم کے ارکان اس اعلامیے کا خیر مقدم کرتے ہیں اور اس کو ایک امر واقعی کے طور پر تسلیم کرتے ہیں۔ واضح رہے کہ میزان ٹیم کے ارکان نے اپنی انفرادی یا اجتماعی حیثیت میں استاذ گرامی اور المورد کے ساتھ کسی قانونی یا انتظامی تعلق کو کبھی بیان نہیں کیا۔ ہم اس طرح کی چیزوں کو دروغ گوئی پر محمول کرتے اور دین و اخلاق کے منافی سمجھتے ہیں۔ ہم المورد کے جاری کردہ اعلامیے کی تصدیق کے ساتھ، یہ امید بہرحال رکھتے ہیں کہ جلد یا بدیر وہ حالات ضرور پیدا ہوں گے جب المورد اور "میزان ڈاٹ ٹی وی" کے مابین فکری اشتراک کے ساتھ ساتھ انتظامی اشتراک کا رشتہ بھی قائم ہو جائے گا۔ ان شاء اللہ۔

 میزان ٹیم

مصنف : میزان ایڈمن
Uploaded on : May 09, 2017
2174 View